جرمنی اور روس نے ایک دوسرے کے لئے فضائی حدودکوبند کرنے کا اعلان کیا

Story by  غوث سیوانی | Posted by  [email protected] | 11 Months ago
جرمنی اور روس نے ایک دوسرے کے لئے فضائی حدودکوبند کرنے کا اعلان کیا

 

نئی دہلی: یوکرین میں روسی فوجی کاروائی کے درمیان جرمنی نے اعلان کیا ہے کہ وہ روسی طیاروں کے لیے اپنی فضائی حدود بند کر دے گا۔

ایسا کرنے سے جرمنی ان یورپی ممالک کی فہرست میں شامل ہو جائے گا جو پہلے ہی روسی ایئر لائنز پر پابندی لگا چکے ہیں۔

آرٹی نے یہ جانکاری دی ہے۔

جرمنی کی وفاقی وزارت برائے نقل و حمل اور ڈیجیٹل انفراسٹرکچر نے اعلان کیا کہ وزیر ٹرانسپورٹ وولکر وِسِنگ "روسی طیاروں کے لیے جرمن فضائی حدود کو روکنے کی حمایت کرتے ہیں اور اس کے لیے ہر چیز کو تیار رکھنے کا حکم دیا ہے۔"

علاوہ ازیں جرمن ایئر لائن لوتھانسا نے روس کے لیے اپنی تمام پروازیں منسوخ کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ روسی فضائی حدود سے آنے والی پروازوں کو جلد ہی روک دیا جائے گا۔

جرمنی اب ان یورپی ممالک میں شامل ہو گیا ہے جس نے روسی طیاروں کے لیے اپنی فضائی حدود بند کر دی ہیں۔ ان میں برطانیہ، پولینڈ، بلغاریہ اور جمہوریہ چیک جیسے ممالک شامل ہیں۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ روس نے بھی ان ممالک کو اپنی فضائی حدود بند کرکے منہ توڑ جواب دیا ہے۔

اتوار کے روز، روس کی فیڈرل ایجنسی برائے ہوائی نقل و حمل نے کہا کہ "لاتویا، لتھوانیا، سلووینیا اور ایسٹونیا کے ہوابازی حکام کے اس مخالفانہ فیصلے کا مطلب ہے کہ روس اپنی سرزمین پر ان ممالک کی پروازوں پر بھی پابندیاں عائد کرے گا۔"

جرمنی نے بھی ہفتے کے روز یورپی کمیشن میں شمولیت اختیار کی، فرانس، اٹلی، برطانیہ، کینیڈا اور امریکہ اور دیگر ممالک نے روس کے خلاف پابندیوں کے نئے دور کا اعلان کیا ہے۔

ان ممالک نے کہا کہ "منتخب روسی بینکوں کوسویفٹ میسجنگ سسٹم سے ہٹا دیا جائے گا"۔ یہ بھی بتایا گیا کہ جرمنی ٹینک شکن ہتھیار اور زمین سے فضا میں مار کرنے والے میزائل "جلد سے جلد" یوکرین کو بھیجے گا۔